سابق وزیراعظم میاں محمد نواز شریف کی والدہبیگم شمیم اختر کا جسد خاکی پاکستان روانہ کر دیا گیا

مدر آف پاکستان بیگم شمیم اختر سابق وزیراعظم میاں محمد نواز شریف کی والدہ کا جسد خاکی پاکستان روانہ کر دیا گیا آج سنٹرل لندن کی جامع مسجد ریجنٹ پارک میں نماز جنازہ ادا کی گئی جس میں شریف فیملی کے ارکان نے نماز جنازہ ادا کی بیگم شمیم اختر کی میت کو آج شام کو ہیتھرو ایئرپورٹ پر برٹش ائیرویز کے ذریعے روانہ کر دیا گیا نواز شریف کے دو پوتے اور ایک بیٹی ان کے ہمراہ گئی ہے جہاز کل صبح پاکستان پہنچے گا

سابق وزیراعظم نوازشریف اور سابق وزیراعلی پنجاب شہبازشریف کی والدہ بیگم شمیم اختر کی نماز ریجنٹ پارک مسجد میں ادا کردی گئی۔ ذرائع کے مطابق مرحومہ شمیم اختر کی میت پاکستان روانگی کیلئے ایمبولینس کے ذریعے ایئر پورٹ روانہ کردی گئی ،لندن میں کورونا لاک ڈاون قوانین کے تحت 30 افراد کو نماز جنازہ میں شرکت کی اجازت دی گئی تھی۔ نماز جنازہ میں نوازشریف، اسحاق ڈار، حسن نواز، حسین نواز، سلمان شہباز اور علی ڈار، علی عمران سمیت خاندان کے دیگر افراد نے شرکت کی۔شریف خاندان کے ذمہ دار ذرائع کے مطابق بیگم شمیم اخترکی میت برٹش ایئرویزکی پروازبی اے 0259 سے لاہورکے لیے روانہ ہوگی۔اس سے قبل ن لیگی ترجمان مریم اورنگزیب نے کہا تھا کہ مرحومہ بیگم شمیم اختر کی میت ہفتے کے دن صبح پاکستان پہنچے گی۔دوسری جانب لاہور میں بیگم شمیم اختر کی تدفین کی تیاریاں جاری ہیں اور ہفتے کو ایس اوپیز کے تحت رائے ونڈ میں بھی ان کی نماز جنازہ ادا کی جائے گی۔واضح رہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف اور سابق وزیراعلی پنجاب شہباز شریف کی والدہ بیگم شمیم اختر اتوار کو لندن میں انتقال کر گئی تھیں۔

Comments

comments