سندھ اور اسلام آباد ہائیکورٹس میں ٹک ٹاک پر پابندی کے خلاف پٹیشن کی سماعت.

  • IMG_20201015_131508.jpg

سندھ ہائیکورٹ۔ ٹک ٹاک پر پابندی کے خلاف پٹیشن کی سماعت

پٹیشن نمبر 5002 کی سماعت جسٹس محمد علی مظہر اور جسٹس ارشد حسین خان پر مشتمل دو رکنی بینچ نے کی

پٹیشن نمبر 5002 میں فیڈریشن آف پاکستان ۔پی ٹی اے اور دیگر کو فریق بنایا گیا ہے

ٹک ٹاک پر پابندی بنیادی انسانی حقوق کی پامالی اور آئین پاکستان کے آرٹیکل 19 کی سنگین خلاف ورزی ہے۔ پٹیشنز منیب احمد ساحل

فحاشی کے الزامات پر چند افراد کے خلاف ایکشن لینے کے بجائے دو کروڑ افراد کو فریڈم آف اسپیچ سے محروم کیا گیا

پہلے پب جی پر بھی فحاشی کا الزام لگا کر پابندی عائد کی گئی تھی جو کہ ہائیکورٹ نے ختم کی تھی

عدالت عالیہ فوری طور پر پابندی کے خلاف اسٹے آرڈر جاری کرے

مستقبل میں بھی ایسے واقعات ہونے سے روکے جائیں۔ منیب احمد ساحل کا پٹیشن میں موقف

عدالت نے سماعت پیر 19 فروری تک ملتوی کردی

‏ٹک ٹاک پر پابندی کے خلاف درخواست پر اسلام آباد ہائی کورٹ کا پی ٹی اے کو نوٹس، جواب طلب

کون فیصلہ کرتا ہے کہ یہ مواد غیر اخلاقی ہے یا نہیں؟ اس طرح تو پورا انٹرنیٹ بند کرنا پڑے گا، کیا موٹروے پر کرائم ہو جائے تو پوری موٹروے ہی بند کر دیں؟ چیف جسٹس اطہر من اللہ

Comments

comments