بارسلونا میں اور بعض ملحقہ شہروں میں منشیات فروشوں کے خلاف بڑا پولیس آپریشن 37 گھروں سے 61 افراد گرفتار

سپین کے شہر بارسلونا میں سٹی سینٹر ایریا اور بعض ملحقہ شہروں میں منشیات فروشوں کے خلاف آج ایک بڑا پولیس آپریشن ہوا۔

ٹوٹل 61 افراد کو گرفتار کیا گیا۔ 37 گھروں میں کارروائی کی گئی۔ اوسپیتال 116 اور روبادور سٹریٹ میں 55 مکانات میں منشیات فروشوں کے مرکزی اڈے تھے۔ اس آپریشن میں 6 کلو ہیروئین اورکوکین قبضہ میں لی گئی۔ ماریوانا کے 350 پودے قبضے میں لیے گئے۔قبضے میں لی جانے والی منشیات کی مالیت 550000 (ساڑھے پانچ لاکھ یورو) بتائی گئی ہے۔ پولیس اہلکاروں نے آپریشن کے دوران 71000 (اکہتر ہزار) یورو اور 118 موبائل فون بھی قبضے میں لیے ہیں۔

بارسلونا میں اپنی نوعیت کا یہ تیسرا بڑا آپریشن تھا۔ آج کے آپریشن کو “کولیسیو” Coliseo کا نام دیا گیا ہے۔ پولیس کے مطابق آپریشن ایک سال سے زیادہ عرصہ تحقیقات کے بعد کیا گیا ہے۔

آپریشن بنیادی طور پر منشیات فروشی کرنے والے ایسے منظم افراد کے خلاف تھا جن کا تعلق پاکستان سے ہے۔ اِن افراد کو منشیات فروشی میں رومانیہ اور نائیجیریا سے تعلق رکھنے والے گروپ کی معاونت بھی حاصل تھی، جو منشیات کو آگے فروخت کرتے تھے۔ خصوصاً لاک ڈاؤن کے دوران یہ کام عروج پر رہا۔
پولیس نے یہ بات بھی بتائی ہے کہ منشیات فروشوں کے خلاف جون 2019ء میں ہونے والے آپریشن میں گرفتار ہونے والا ایک ” باس” اس دھندے کو جیل کے اندر رہتے ہوئے مینیج کر رہا تھا، یعنی وہاں سے احکامات دے رہا تھا۔پولیس کی تحقیقات میں یہ بات بھی شامل ہے کہ بعض لوگوں کو خصوصی طور پر منشیات فروشی کے لیے مختلف طریقوں سے پاکستان، رومانیہ اور سپین کے دیگر شہروں سے بارسلونا لایا گیا تھا۔
بارسلونا میں قبضہ شدہ مکانوں کو منشیات فروشی کے اڈے اور سٹورز کے طور پر استعمال کیا جاتا تھا۔آپریشن کی بڑی کارروائی تو مکمل ہو چکی، مگر تحقیقات جاری ہیں، اگلے دنوں میں مزید کارروائیاں اور گرفتاریاں بھی عمل میں آسکتی ہیں۔پولیس کے مطابق منشیات کو مختلف طریقوں سے پاکستان اور انگلینڈ سے بارسلونا لایا جاتا تھا۔

Comments

comments