راولپنڈی میں تحریک انصاف کے مقامی رہنماؤں کو خوش کرنے کی کوشش میں انتظامیہ شیعہ سنی تنازعہ کرا بیٹھی

No video URL found.

‏دھاماں سیداں میں فائرنگ پولیس کا اے ایس آئی زخمی زرائع کے مطابق ‏تمام شیعہ افراد موقع سے فرار سی پی او کی میٹنگ طاہر مغل کے گھر میں ہوئی جس میں صرف 5 بندے جس میں طاہر مغل اس کا بہنوئی بھانجے ایک دو اور گھر کے فرد شامل تھے۔ سی پی او ‎ واپس راولپنڈی روانہ صحافی اسرار احمد راجپوت کے مطابق ‏‎‎‎ساری زمہ داری ایس ایچ او اور پھر ڈی ایس پی کی بنتی تھی کہ معاملات کو قابو میں رکھتے مگر انہوں نے شکایت کنندگان کو بھی الزام علیہان ساتھ تھانے بند رکھا اور یوں گاؤں میں اشتعال پیدا ہوا۔


سی پی او راولپنڈی محمد احسن یونس جاتلی کے گاؤں بھیر کلیال پہنچ گئے؛ سابق یو سی ناظم طاہر مغل و دیگر اہلیان علاقہ ساتھ میٹنگ؛ علاقہ میں کشیدگی برقرار۔ ‏ازاں بندہ ضمانت پر چھوڑا گیا؛ آج بروز ہفتہ اہل تشیع نے پھر جلوس نکالنے کی کوشش کی جس کی شکایت دوبارہ پولیس کو کی گئی؛ اہل تشیع کا شکایت کنندگان کے گھروں پر پتھراؤ:
دو بچے زخمی؛ ‎سی پی او جائے وقوعہ جانب روانہ؛ زرائع کا دعوی کہ تھانہ جاتلی کے SHO کی نااہلی باعث فساد پھوٹا صحافیوں کی اطلاع کے مطابق۔ ‏راولپنڈی نواحی علاقہ ساگری میں9محرم الحرام کے2جلوسوں کی رات برآمدگی 1جلوس کی اجازت /دوسرا جلوس بنا اجازت اس سے قبل دن کو بھی یہ معاملہ پیش آیا تھا اور ایس پی آپریشن نے موقع پر پہنچ کر معاملہ کو نمٹایا تھا تاہم انہوں نے بھی جلوس برآمدگی کی اجازت دے دی تھی
‎‏تھانہ روات ڈی ایف سی کی رپورٹ پر ایس ایچ نے جلوس نکالنے والوں کے خلاف کارواٸی کا عندیہ دیا تھا لیکن تحریک انصاف کے مقامی سیاسی نماٸندوں کی مداخلت پر جلوس برآمد کروادیا گیا تھا۔۔زراٸع
سی پی او راولپنڈی کے مطابق تھانہ جاتلی میں شیعہ سنی تصادم نہیں ہوا بلکہ تند و تیز جملوں کا تبادلہ ہوا گاؤں میں کسی کے زخمی ہونے کی اطلاع نہ ہے: امن و امان بحال کرنے میں خود جاتلی گیا

Comments

comments