پی ٹی آئی کے صوبائی وزیر علیم خان کی نجی ہاؤسنگ سوسائٹی کے سرکاری اراضی پر مبینہ قبضے کا معاملہ عدالت نے سیکرٹری اسٹیبلشمنٹ ڈویژن کو آئندہ سماعت میں ذاتی طور پر طلب کر لیا بتائیں کہ سرکاری ادارے کس رول کے تھے سوسائٹیز بنائے ہیں دارالحکومت نہیں تورا بورا ہے، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

  • IMG_20200611_152743.jpg

پی ٹی آئی کے صوبائی وزیر علیم خان کی نجی ہاؤسنگ سوسائٹی کے سرکاری اراضی پر مبینہ قبضے کا معاملہ

عدالت نے سیکرٹری اسٹیبلشمنٹ ڈویژن کو آئندہ سماعت میں ذاتی طور پر طلب کر لیا،

سیکرٹری اسٹیبلشمنٹ ڈویژن عدالت کو بتائیں کہ سرکاری ادارے کس رول کے تھے سوسائٹیز بنائے ہیں، عدالت حکم

عدالت نے آئندہ سماعت میں اٹارنی جنرل کو پیش ہونے کا حکم

اسلام آباد پاکستان کا دارالحکومت نہیں تورا بورا ہے، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

وفاقی ادارے اسٹیٹ اجنٹ بنے ہوئے ہیں، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

کل پھر اسلام آباد ہائیکورٹ اپنی سوسائٹی بنائے، یہ مذاق بنا ہوا ہے، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

عدالت نے وزارت داخلہ وکیل کی سرزنش کی،

سماعت اسلام آباد ہائیکورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ نے کی،

سیکرٹری داخلہ رپورٹ عدالت میں جمع کرائیں، عدالتی حکم

یہ وزارت کی سوسائٹی نہیں ہے، بلکہ وزارت داخلہ کے ملازمیں کا سوسائٹی ہے، وکیل وزارت داخلہ

عدالت نے ماسٹر پلان کے حوالے سی ڈی اے ممبر سے سوال کیا،

جواب نہ دینے پر عدالت نے سی ڈی اے ممبر کی سرزنش کی،

ڈپٹی کمشنر کہاں ہے، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

ڈپٹی کمشنر کو روسٹرم پر بلا لیا،

اسلام آباد 14 سو اسکوائر میلز پر محیط ہے، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

تمام سرکاری ادارے زمین کے کاروبار میں شامل ہے، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

چیف کشمنر کی آشیرباد پر سب کچھ ہو ہے، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

جو صدیوں سے آباد تھے ان کو ابھی تک معاوضہ نہیں دیا گیا، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

سب نے جرم کے لئے دستانے پہنے ہوئے ہیں، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

بڑے آدمی غیر قانونی کام کو ریگولرائز کیا جاتا ہے، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

ڈپٹی کمشنر صاحب اب بتائیں آئینی ہائیکورٹ کو بند کر دوں، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

چیف جسٹس اطہرمن اللہ نے ڈپٹی کمشنر کی سرزنش کی،

آپ کے پٹواری فرد کو رشوت لے پر تبدیل کرتا ہے، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

وزارت داخلہ، آئی بی اور ڈیفنس کی سوسائٹی ہے، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

ڈپٹی اٹارنی آپ حلفہ بیان دیں کسی کے ساتھ ناانصافی نہیں ہو گی، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

ڈپٹی کمشنر اپ کے آفس میں زینوں کے کتنی درخواستیں زیر سماعت ہیں، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

چیف کمشنر نے حلفیہ بیاں عدالت میں جمع کرانے کی یقین دہانی کی،

سی ڈی اے نے رپورٹ دی ہے کہ وزارت داخلہ کے احکام اسلام آباد کے زمینون کے قبضے میں ملوث ہیں، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

کوئی اے سی کو ڈپٹی کمشنر سروے کے لئے مقرر کر دے اور پھر رپورٹ عدالت میں جمع کرائیں، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

سی ڈی اے نے اسلام آباد کی ماسٹر پلان تباہ کر دی ہے، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

قانوں سے بالاتر میں بھی نہیں ہوں، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

ایف آئی اے کیسے اپنا رول ادا کرے گی کیونکہ وہ خود زمین کے کاروبار میں ملوث ہے، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

سرکاری اداروں نے دفتری کام سے زیادہ زمیں کے کاروبار میں ملوث ہیں، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

اسلام آباد کے جتنے بھی سوسائٹیز ہیں سب غیر قانونی ہیں، ڈپٹی کمشنر اسلام آباد

یہ الارمنگ صورتحال ہے، عدالتی حکم

عدالت نے سماعت 7 ستمبر تک ملتوی کر دی،

پی ٹی آئی کے صوبائی وزیر علیم خان کی نجی ہاؤسنگ سوسائٹی کے سرکاری اراضی پر مبینہ قبضے کا معاملہ

عدالت نے وزارت محکمہ موسمیات کے وزیر سے بھی رپورٹ طلب کر لیا،

کیا صرف قانوں غریب کے لئے ہے، چیف جسٹس اطہرمن اللہ

Comments

comments