کراچی میں بھتہ وصول کرنے والے سوات کے دو دہشتگرد رینجرز نے گرفتارکرلئے

  • PhotoGrid_1579117373729.jpg

پاکستان رینجرز(سندھ) نے انٹیلی جنس معلومات کی بنیاد پر کراچی ضلع غربی میں کارروائی کر تے ہوئے بھتہ وصولی میں ملوث کالعدم تنظیم کے 2 اہم کارندوں رشید عرف خان بابا عرف بلا اور اسماعیل عرف چپس والاکو گرفتار کیا۔تفصیلات کے مطابق ملزمان سوات انتظامیہ اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کو مطلوب تھے۔ملزم رشید عرف خان بابا عرف بلا گرفتار ی کے ڈر سے سوات سے فرار ہو کر کراچی آگیا تھا اورکراچی میں کالعدم تنظیم کے بھتہ گروپ کے امیرسیف اللہ اور سلمان عرف ابرار جو کہ افغانستان مفرور ہیں کہ حکم پربھتہ وصولی کی کارروائیاں کرتا تھا جبکہ ملزم اسماعیل عرف چپس والاکراچی کا رہائشی ہے اور کالعدم کا سرگرم کارندہ اور سہولت کار ہے۔ ملزمان کراچی کے مختلف علاقوں میں بھتہ وصولی کی کارروائیوں کے ساتھ ساتھ بھتہ وصولی کے لیے سہولت کاری میں بھی ملوث ہیں۔ ملزمان کے جرائم کی تفصیلات درج ذیل ہیں:۔

۱۔ ملزمان نے 20 اپریل 2019 ؁ء کو اورنگی ٹاؤن سیکٹر 10 فریدآبادمیں 20 لاکھ روپے بھتہ نہ دینے کی وجہ سے پر چون کی دوکان کے مالک آصف الرحمان پر فائرنگ کی جس کے بعد پر چون کی دوکان کے مالک نے ملزمان کو ایک لاکھ روپے بھتہ دیا۔واردات کی ایف آئی آر مو من آباد تھانے میں درج ہے۔

۲۔ ملزمان نے 12 جون 2019 کو فرید آباد اورنگی ٹاؤن سیکٹر 10 میں رینٹ اے کار کے مالک اعجاز آفریدی کوغیر ملکی فون نمبر سے ایک کروڑ روپے بھتے کی ڈیمانڈر کی اور بھتہ نہ دینے پر اعجاز آفریدی کے گھر پر کفن، دھمکی آمیز خط اورراؤنڈز بھجوائے گئے جس کی ایف آئی آر تھانہ مومن آباد میں درج ہے۔

۳۔ ملزمان نے 28 اگست 2019 کو شیر شاہ میں کباڑ کا کارو بار کرنے والے رومان نامی شخص کو غیر ملکی فون نمبر سے ایک کروڑ روپے بھتے کی ڈیمانڈ کی اور بھتہ نہ دینے کی صورت میں جان سے مارنے کی دھمکیاں بھی دی جس کی ایف آئی آر تھانہ مومن آباد میں درج ہے۔
ملزمان کے قبضے سے کارروائیوں میں استعمال ہونے والا اسلحہ اور ایمونیشن بھی بر آمد کر لیا گیا ہے۔ ملزمان کو قانونی کارروائی کے لیے پولیس کے حوالے کر دیا گیا ہے۔ عوام سے اپیل ہے کہ ایسے عناصر کے بارے میں اطلاع فوری طور پر قریبی چیک پوسٹ،رینجرز ہیلپ لائن 1101 یا رینجرز مددگار واٹس ایپ نمبر03479001111 پر کال یا ایس ایم ایس کے ذریعے دیں۔آپ کا نام صیغہ راز میں رکھا جائے گا۔

ترجمان سندھ رینجرز
PRO________

Comments

comments