اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کمشنر کا مقبوضہ جموں و کشمیر کی صورتحال پر شدید تشویش کا اظہار

  • IMG_20191031_060406.jpg

مقبوضہ کشمیر : بھارتی فوج کی دہشت گردی ،ضلع اسلام آباد میں کریک ڈاون کے دوران کشمیری نوجوان کو شہید کر دیا

مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجیوں نے اپنی ریاستی دہشت گردی کی تازہ کارروائی کے دوران ضلع اسلام آباد میں ایک نوجوان کو شہید کر دیا۔ جبکہ ضلع کلگام میں نامعلوم حملہ آوروں نے 5 مزدور قتل کردئیے،قابض فوجیوںنے بدھ کو ایک نوجوان کو ضلع کے علاقے بیج بہاڑہ میں محاصرے اور تلاشی کی کارروائی کے دوران ایک جعلی مقابلے میں شہید کر دیا۔ دریں اثنا نامعلوم افراد کی طرف سے ضلع پلوامہ کے علاقے درابگام میں بھارتی فوج کے ایک بنکر پر حملے کے بعد قابض اہلکاروں نے اندھا دھند فائرنگ کی ۔ بھارتی فوجیوں نے بعد میں علاقے کا محاصرے کر کے حملہ آوروںکی تلاش شروع کر دی۔علاوہ ازیں مقبوضہ کشمیر کے ضلع کلگام میں 5 مزدوروں کو قتل کر دیا گیا۔مقبوضہ کشمیر کی پولیس کے مطابق نامعلوم مسلح افراد نے ان مزدوروں کو گھر سے نکال کر فائرنگ کر کے قتل کیا، مارے گئے افراد کا تعلق مغربی بنگال سے تھا۔حریت رہنماوں نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی قابض افواج کے ہاتھوں 5 بے گناہ مزدوروں کے قتل کی مذمت کی ہے۔

کشمیر میں لاک ڈاون اور جھڑپوں کے درمیان یوروپی یونین وفد کا دورے کا دوسر ا روز

مقبوضہ جموں و کشمیر کی صورتحال کا جائزہ لینے کے لئے یوروپی یونین کا 23 رکنی پارلیمانی وفد سخت ترین سیکورٹی میں دو روزہ دورے پر ہے۔ اس موقع پر وادی میں مکمل ہڑتال رہی اور متعدد مقامات پر عوام اور قابض افواج کے مابین جھڑپیں ہوئیں سیکورٹی گاڑیوں کا ایک قافلہ ان ارکان پارلیمنٹ کے ساتھ تھا۔ یہ ارکان ایرپورٹ سے ایک بلٹ پروف جیپ کے ذریعہ اپنے ہوٹل پ پہنچے ۔ یہ ٹیم اپنے دو روزہ دورہ پر یہاں پہنچی تھی جہاں سینئر سکیوریٹی افسران نے انھیں وادی اور ریاست کے دیگر علاقوں کی تازہ ترین صورتحال سے بریف کیا۔ وفد کوعام لوگوں اور سیاسی جماعتوںسے ملاقات کی اجاز ت نہیں دی گئی ۔ عہدیداروں نے کہاکہ وادی کے مختلف حصوں اور سرینگر میں مکمل بند رہا۔ سکیوریٹی اہلکاروں اور عوام کے درمیان کئی مقامات پر تصادم کے واقعات پیش آئے۔ سرینگر کے وسطی علاقے اور 90 فٹ چوڑی سڑک کے علاوہ اس شہر کے دیگر کم سے کم پانچ مقامات پر عوام نے رکاوٹیں کھڑا کرتے ہوئے راستوں کو بند کردیا تھا۔ سڑکوں کے کنارے چھوٹے کاروبار کرنے والے افراد آج اپنی دوکانات نہیں لگائے تھے۔ تاہم 10 ویں جماعت کے بورڈ امتحان مقررہ پروگرام کے مطابق منعقد ہوئے۔

اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کمشنر کا مقبوضہ جموں و کشمیر کی صورتحال پر شدید تشویش کا اظہار

اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کمشنر نے مقبوضہ جموں و کشمیر میں بھارت کے غاصبانہ اقدامات، کرفیو، لاک ڈاون اور عام شہریوں کی شہادتوں پر شدید تشویش کا اظہار کیا ہے۔اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کمشنر نے بھارت سے لاک ڈاون، کرفیو ختم، سلب شدہ حقوق بحال کرنے کا مطالبہ کردیا۔ ترجمان ہائی کمشنر کے مطابق بھارتی حکومت نے 12 ہفتے قبل 5 اگست کو مقبوضہ کشمیر کی آئینی خودمختاری سلب کی۔بھارت نے جموں و کشمیر کو دو یونین یعنی خطوں میں تقسیم کیا اور عوامی ردعمل سے بچنے کے لیے پوری وادی سخت پابندیاں لگا رکھیں ہیں۔ترجمان ہائی کمشنر نے کہا کہ بھارتی اقدامات نے انسانی حقوق پر سنگین اثرات مرتب کیے ہیں۔ بھارت نے کہا تھا کہ کرفیو جلد اٹھا لیا جائے گا تاہم وعدے کا پاس نہ کیا کیا کشمیری عوام کو پرامن احتجاج، صحت، تعلیم تک رسائی اور مذہبی آزادی حاصل نہیں۔ترجمان نے کہا کہ بھارتی فورسز پیلٹ گنز، آنسو گیس اور ربڑ کی گولیوں کا بے دریغ استعمال کر رہی ہیں۔ بھارتی فائرنگ سے 5 اگست کے بعد کم از کم 6 کشمیری شہید اور کئی زخمی ہوئے ہیں۔ ذرائع ابلاغ پر قدغن ہے جبکہ 4 صحافی بھی گرفتار ہیں

مسلم دنیا کوتنازعہ کشمیر سمیت اپنے مسائل حل کرنے کے لیے اپنا طریقہ کار وضع کرنا چاہیے: ترک رکن پارلیمنٹ

رکی کے ایک رکن پارلیمنٹ نے پاکستان اور بھارت کے درمیان تنازعہ کشمیر کو مسلمانوں کے اپنے مرتب کردہ طریقہ کارکے ذریعے حل کرنے کی تجویز دی ہے۔ ترکی کے دارالحکومت انقرہ میں کشمیر کے حوالے سے منعقدہ ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے حکمران جسٹس اینڈ ڈیولپمنٹ پارٹی کے رکن پارلیمنٹ علی شاہین نے کہاکہ ترکی کشمیریوں کو درپیش مشکلات سے اچھی طرح واقف ہے ۔ انہوں نے کشمیر کے بارے میں اقوام متحدہ کے فیصلوں پر بھارت کی طرف سے عمل نہ کرنے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اگرہم اقوام متحدہ کی قراردادوں یا بین الاقوامی قوانین کے مطابق تنازعہ کشمیر حل نہیں کرسکتے تو پھر مسلمانوں کواپنے مسائل حل کرانے کے لیے اپنا طریقہ کاروضع کرنا چاہیے۔ رکن پارلیمنٹ نے کہاکہ کشمیر ترکوں کے لیے سرخ لکیر ہے اور اس کو تمام مسلم دنیا کے لیے بھی سرخ لکیر ہونا چاہیے۔ انہوںنے کہاکہ جوتکلیف کشمیر ی سرینگر میں محسوس کررہے ہیں ہم یہاں محسوس کررہے ہیں لیکن صرف ایکدوسرے کو تکلیف محسوس کرنے کا پیغام دینا کافی نہیں ہے بلکہ ہمیں اس سلسلے میں بین الاقوامی سطح پر آگاہی پیدا کرنا ہوگی۔

مودی سرکار جموں و کشمیر کی حقیقی صورتحال کو چھپانے کی کوشش کررہی ہے، پی ڈی پی

مقبوضہ کشمیر میں پی ڈی پی نے الزام عائد کیا ہے کہ مودی حکومت جموں و کشمیر کی حقیقی صورتحال کو پوشیدہ رکھنے کی کوشش کر رہی ہے ۔ پی ڈی پی نے کہا کہ قومی سلامتی کے مشیر اجیت ڈویل کے ظہرانہ میں اس نے شرکت نہیں کی اور خود کو اس سے الگ بتایا ۔ اجیت ڈویل نے ظہرانہ پر یوروپین یونین کے 27 ارکان پر مشتمل وفد سے ملاقات کی جو جموں و کشمیر کے دورہ پر ہے۔ لنچ تقریب میں پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی لیڈر و سابق ڈپٹی چیف منسٹر مظفر حسین بیگ اور دوسروں نے شرکت کی۔ جموں و کشمیر میں آرٹیکل 370 کی منسوخی کے بعد یہ پہلا بیرونی وفد ہے جو ریاست کا دورہ کر رہا ہے ۔ بیرونی وفد کے دورہ کو کشمیر کی صورتحال سے متعلق پاکستان کے بیان کا جواب دینے کیلئے حکومت کے سفارتی اقدام کے طورپر دیکھا جارہا ہے ۔ پی ڈی پی نے پارٹی کے کسی لیڈر کی لنچ میں شرکت سے متعلق کہا کہ وہ اس کا شخصی معاملہ ہے جبکہ مظفر حسین بیگ کے علاوہ پی ڈی پی کے ایک اور لیڈر الطاف بخاری نے بھی ڈویل کے لنچ میں شرکت کی

کرفیواور پابندیوں نے کشمیری عورتوں کی زندگی اجیرن کردی،ملیحہ لودھی
آ

اقوام متحدہ میں پاکستان کی سابق مندوب ڈاکٹرملیحہ لودھی نے کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں کرفیو اورپابندیوں نے کشمیری عورتوں کی زندگی اجیرن کردی ۔ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں الوداعی خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹرملیحہ لودھی نے کہا کہکشمیرمیں بھارتی جارحیت اور اس کے سنگین اثرات پرروشنی ڈالی۔ ملیحہ لودھی نے سلامتی کونسل میں کشمیری خواتین کے تحفظ پرزورڈالتے ہوئے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں عورتوں کواذیت اورکرب کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے، کرفیواور پابندیوں نے کشمیری عورتوں کی زندگی اجیرن کردی ۔

Comments

comments