بیرون ملک سرمایہ کاری کرنے والوں کے لئے 15 مارچ تک ایمسنٹی اسکیم لے آئیں گے، رانا افضل

  • IMG_20180228_142345.jpg

وزیر مملکت برائے خزانہ رانا افضل نے کہا ہے کہ بیرون ملک سرمایہ کاری کرنے والوں کے لئے 15 مارچ تک ایمسنٹی اسکیم لے آئیں گے۔ جون 2018 تک آئی ایم ایف کو 3 ارب ڈالر ادا کرنے ہیں۔بجٹ میں سالانہ آمدنی کی حد 4 لاکھ سے بڑھا کر 8 لاکھ کرنے کی تجویز ہے۔وزیر مملکت برائے خزانہ رانا محمد افضل کی برآمدکنندگان سے کراچی کے پی ایچ ایم اے ہاوس میں ملا قات ہوئی۔وزیر مملکت نے بتایاکہ صنعتکاروں کے مسائل کو مانتے ہیں۔انہوں نے کہاکہ ایف اے ٹی ایف کے اہم ایشو کی وجہ سے سیلزٹیکس ریفنڈز دینے میں تاخیر ہوئی لیکن پالیسی میں کوئی تبدیلی نہیں ہوئی،جلد جاری ہونے والے آر او کو ادائیگی کردی جائے گی۔رانا افضل نے کہا کہ بیرون ملک سرمایہ کاری کرنے والوں کے لئے اسکیم پندرہ مارچ تک لے آئیں گے۔انہوں نے مزید بتایا کہ جون تک آئی ایم ایف کو 3 ارب ڈالر ادا کرنے ہیں ، جس کے لئے بھی اقدامات کررہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ٹیکس ریلیف کے لئے بھی اقدامات کئے جارہے ہیں ۔پاکستان اپیرل فورم کے چیئرمین جاوید بلوانی نے کہاکہ پیداواری لاگت میں کمی اور سیلزٹیکس ری فنڈز جاری ہونے سے ہی ملکی برآمدات میں اضافہ ممکن ہے۔

Comments

comments