نیب کی کارروائی، صوبائی وزیرجنگلات سبطین خان گرفتار

  • img-20190614-wa05768009076708539210260.jpg

لاہور: نیب نے پاکستان تحریک انصاف کے ایم پی اے اور صوبائی وزیر جنگلات سبطین خان کو گرفتار کر لیا ہے۔

ذرائع کے مطابق نیب کی کارروائیوں میں تیزی دیکھنے میں آ رہی ہے، پیپلز پارٹی کے شریک چیئر مین آصف علی زرداری کی بہن اور چیئر مین بلاول بھٹو زرداری کی پھوپھی کی گرفتاری کے بعد پاکستان تحریک انصاف کے ایم پی اے اور صوبائی وزیر جنگلات پنجاب سبطین خان کو گرفتار کر لیا ہے۔

ذرائع کے مطابق صوبائی وزیر اور پی ٹی آئی ایم پی اے سبطین خان پر چنیوٹ میں غیر قانونی ٹھیکوں کا الزام ہے۔ انہوں نے 2007ء میں بطور وزیر چنیوٹ میں معدنی وسائل کا ٹھیکہ دیا۔ ان پر بطور وزیر مائنز اینڈ منرلز اربوں روپے کے ٹھیکے دینے کا الزام ہے۔ اس وقت وزیراعلیٰ پنجاب چودھری پرویز الٰہی تھے۔

نیب حکام کے مطابق انہیں کل احتساب عدالت میں پیش کیا جائے گا جہاں ان کا کل عدالت سے 15 روزہ جسمانی ریمانڈ کی استدعا کی جائے گی۔

یاد رہے کہ صوبائی وزیر جنگلات سبطین خان کی سیاست کا آغاز 90ء کی دہائی میں ہوا۔ 1990 سے لیکر 1993ء تک پنجاب کے ایم پی اے رہے اسی دوران 1990 سے 1993ء تک صوبائی وزیر جی

Comments

comments