مدینہ کانعرہ لگانے والے مدینہ جانے کے راستے بندکررہے ہیں ،سراج الحق

امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق کا دورہ اٹک،
مدینہ کانعرہ لگانے والے مدینہ جانے کے راستے بندکررہے ہیں ،سراج الحق
موجودہ حکومت نے قوم کومایوس کیا ، یکم مارچ سے ملک گیرعوامی رابطہ مہم کا آغازکررہے ہیں
موجود ہ حکومت ن لیگ ،پی پی اورمشر ف لیگ کا مجموعہ ہ،طارق سلیم ،اقبال خان ودیگرکا اجتماع سے خطاب

اٹک امیرجماعت اسلامی پاکستان سینیٹرسراج الحق نے کہاہے کہ مدینہ کی ریاست کا نعرہ لگانے والے مدینہ جانے کی راستے بندکررہے ہیں۔پیپلزپارٹی ،ن لیگ اورمشرف لیگ ناکام ہوئیں توان سب کا مجموعہ موجود ہ حکومت کیسے کامیاب ہوسکتی ہے ۔جونعرے ،وعدے اوراعلانات کئے گئے ،سفراس کے بالکل مخالف سمت ہے ۔قومی اسمبلی میں اب تک کوئی قانون سازی نہیں کی گئی اس اہم مقدس پلیٹ فارم کوہلڑ بازی اورگالی گلوچ کا مرکز بنادیا گیا ہے۔ جے آئی یوتھ کے نوجوان جماعت اسلامی ہی نہیں ملک وقوم کیلئے سرمایہ ہیں جوظالمانہ نظام کے خاتمے اورمظلوم کی حمایت کیلئے جدوجہدکررہے ہیں۔ان خیالات کااظہارانھو ں نے جماعت اسلامی اٹک کے ضلعی اجتماع ارکان او رجے آئی یوتھ کے ضلعی عہدیداران کی تقریب حلف برداری سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔اس مو قع پرامیرصوبہ پنجاب ڈاکٹرطارق سلیم ،صوبائی جنرل سیکرٹری اقبال خان ،امیرضلع سردارامجدعلی خان ،صوبائی صدرجے آئی یوتھ اویس اسلم مرزا سمیت دیگررہنماؤں نے بھی خطاب کیا ۔ سینیٹرسراج الحق نے کہاکہ موجود ہ حکومتی پارٹی نے اپنے منشورمیں ایک کروڑنوکریاں اور 50لاکھ گھردینے کا وعدہ کیا لیکن دن دبدن بے روزگاری میں اضافہ اورعوام سے سر چھپانے کی چھت چھینی جارہی ہے،موجودہ وزیراعظم اورحکمران پارٹی نے خود کوامیدکے طورپرعوام کے سامنے پیش کیا لیکن قوم کوان کی پالیسیوں اوررویے سے بدترین مایوسی ہوئی۔یکم مارچ سے ملک گیرعوامی رابطہ مہم کا آغازکررہے ہیں کارکن اور ذمہ داران ہرگھرپردستک دیں ،جے آئی یوتھ اس تحریک میں ہراول دستے کا کرداراداکرے گی اس کیلئے ہم 28فروری کویوتھ بورڈ کااجلاس بلا رہے ہیں۔انھوں نے کہاکہ حکومت سانحہ ساہیوال کے مجرموں کو سزا دینے کی بجائے ان کے تحفظ کیلئے اقدامات کررہی ہے قوم ایسی کسی جے آئی ٹی کوتسلیم نہیں کرتی جس کے ذریعے قاتلوں اوربے گناہ عوام کا قتل عام کرنے والوں کوتحفظ فراہم کیا جائے ۔انھوں نے کہاکہ حکومت نے پہلے آئی ایم ایف کے پاس نہ جانے کا اعلان کیا لیکن اب ان کے مطالبات سے قبل ہی تمام شرائط پوری کرکے عوام کوبدترین مسائل سے دوچارکردیا ہے، اس کوبڑی کامیابی کے طورپربھی پیش کیا جاتا ہے، روپے کوبے قدرکرنے سے ڈالرکوفائدہ ہوا اورپاکستانی تاجروں کوشدیدنقصان ہوا۔سوئی گیس کے بلوں کی صورت غریب عوام پرظلم کیا گیا ۔ملک میں سیکولرازم کے فرو غ کیلئے سبسڈی اورفنڈزموجود ہیں لیکن حج جیسی عبادت کوانتہائی مہنگا کردیا گیا ،ہندوستان،بنگلہ دیش ،افغانستان سمیت دیگرممالک میں حج اخراجات انتہائی کم ہیں ۔
امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہاہے کہ آئی ایم ایف کے دروازے پر دستک دے کر حکمران سمجھتے ہیں کہ انہوںنے بڑا تیر مارا ہے ۔ یہی کام تو سابقہ حکمران کرتے رہے ہیں جس کی وجہ سے قوم کو یہ دن دیکھنا پڑے ہیں ۔ آئی ایم ایف کے پاس جانے سے ضرورت کی عام چیزیں مہنگی ہوں گی ، بجلی ، تیل ، گیس کی قیمت بڑھے گی روپیہ مزید خوار اور ڈالر مزید مضبوط ہوگا ۔ سود کی شرح بڑھے گی اور مہنگائی کا نہ رکنے والا سیلاب آئے گا ۔ وزیراعظم آئی ایم ایف کے ڈو مور کے مطالبے کو مسترد کر کے قوم کو مہنگائی کے سونامی سے بچائیں۔ لاء اینڈ آرڈر کی حالت بہت تشویش ناک ہے ۔ معصوم بچے اور بچیاں بھی اب غیر محفوظ ہیں ۔ تعلیم اور صحت کے حوالے سے بھی کوئی انقلابی پروگرام سامنے نہیں آیا ۔ جماعت اسلامی چاہتی ہے کہ پاکستان ایک ویلیفئر ریاست بنے ۔ یہ اسی وقت ممکن ہے جب ملک کی باگ ڈور ایک نظریاتی اور دیانتدار قیادت کے ہاتھ میں ہوگی ۔ان خیالات کااظہار انہوں نے اٹک میں جے آئی یوتھ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا

Comments

comments